اے وی ایل سی، سی آئی اے، کراچی کی بہترین کاروائیاں۔

شکُّر نیوز رپورٹنگ،

پریس ریلیز
مورخہ: 10 جنوری2023

اے وی ایل سی، سی آئی اے، کراچی کی بہترین کاروائیاں۔

کراچی کے مختلف علاقوں سے کاریں چھیننے / چوری کرنے کے ماھر اور چھینی / چوری کی گئی کاروں کو ملتان لے جا کر فروخت کرنے والے تین (03) اھم ملزمان گرفتار۔

کراچی کے مختلف علاقوں سے چھینی / چوری کی گئی تین (03) ٹویو ٹا کرولا کار یں اور ایک (01) ھنڈا سوک کار برآمد۔

کاروائی نمبر 1: ڈی آئی او نارتھ نا ظم آباد ڈویژن نے تھانہ نیوکراچی سے صبح سات بجے چوری ہو نے والی ٹویو ٹا کرولا دوپہر دو بجے کنڈیارو پولیس کی مدد سے دو ملزمان سمیت بر آمد کرلی۔

گرفتار شدہ ملزمان سرقہ شدہ کاروں کو ملتان لے جا کررانا نامی ملزم کو فروخت کر تے ہیں جس کی گرفتاری جلد متوقع ہے۔

کاروائی نمبر2: ڈی آئی او نارتھ نا ظم آباد ڈویژن نے دوسری کاروائی کے دوران کراچی کے مختلف علاقوں سے کاریں چھیننے / چوری کرنے کے ماھر عادی جرائم پیشہ کار لفٹنگ کی متعدد وارداتوں میں ملوث اھم ملزم کو گرفتار کر کے کراچی کے مختلف علاقوں سرقہ شدہ دو (02) کاریں بر آمد کر لیں۔

ملزم سے برآمد، سرقہ شدہ کار نمبر AGX-244 جو کہ ایک وکیل کی ملکیت تھی جس کو برآمدگی پر مشکوک جانتے ہو ئے چیک کر وانے پرچیسز نمبر کی پٹی جعلی طور پر ویلڈنگ کی ہوئی پائی گئی اور اند ر سے گا ڑی کا اصل چیسزنمبر برآمد ہونے پر کار رجسٹریشن نمبرAGX-763 بر آمد ہوئی جو کہ ایک دوسرے وکیل کی سرقہ شدہ کا ر ہے۔

کاروائی نمبر3: ایک اور کاروائی کے دوران ایس ایچ او، تھانہ اے وی ایل سی نے صبح پانچ بجے کے الیکٹرک کی تین نا معلوم ملزمان کے ذریعہ اسلحہ کے زور پر چھینی جانے والی ٹویو ٹا کرولا کار رجسٹریشن نمبر BGF-785 جس پر جعلی نمبر پلیٹ BGA-509 لگی ہوئی تھی رات ڈھائی بجے گلزار ھجری اسکیم 33 سے برآمد کر لی۔

گرفتار شدہ ملزمان:

نمبر1: اسامہ و لد نواز۔
نمبر2: شہزاد گل پٹھان و لد فیروز۔
نمبر3: سلیم ملاح و لد گل محمدملاح۔

برآمدگی:

نمبر1: کار نمبرAWL-471 ٹویوٹا کرولا تھانہ نیو کراچی سے سرقہ ہے جس کا مقدمہ الزام نمبر18/2024 ہے۔
نمبر2: کار نمبرART-587 ٹویوٹا کرولا تھانہ گذری سے سرقہ ہے جس کا مقدمہ الزام نمبر05/2024 ہے۔
نمبر3: کار نمبرAGX-763 ھنڈا سوک تھانہ نیو کراچی سے سرقہ ہے جس کا مقدمہ الزام نمبر18/2024 ہے۔ؒٓ
نمبر4: کار نمبرBGF-785 ٹویوٹا کرولا تھانہ کی حدود سے چھینی گئی تھی۔

مزید تفتیش جا ری ہے۔

ترجمان،
ایس ایس پی عرفان علی سموں،
اے وی ایل سی، سی آئی اے کراچی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Don`t copy text!