مودی سرکار کی رام مندر بم سے اڑانے اور الزام مسلمانوں پر لگانے کا منصوبہ بے نقاب

ویب ڈیسک،

جنتا دل پارٹی کے رہنما نے مودی سرکار پر رام مندر کو بم سے اڑانے کی پلاننگ کا الزام لگا دیا

انتخابات میں جیت کیلئے مودی سرکار کی رام مندر بم سے اڑانے اور الزام مسلمانوں پر لگانے کا منصوبہ بے نقاب ہوگیا۔

بھارت کی سیاسی جماعت جنتا دل پارٹی کے رہنما اجے یادیو نے مودی سرکار پر رام مندر کو بم سے اڑانے کی پلاننگ کا الزام لگا دیا۔ اجے یادیو نے کہا کہ بی جے پی 22 جنوری 2024 کو رام مندر کے افتتاح کے موقع پر بم دھماکا کرے گی۔

اجے یادیو کے مطابق بی جے پی کے ممکنہ بم دھماکے سے مذہبی تناؤ شدت اختیار کر جائے گا، مودی سرکار ایودھیہ رام مندر پر حملہ کرکے الزام پاکستان اور مسلمانوں پر لگانا چاہتی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے ٹیکس کے پیسے سے تعمیر کئے گئے رام مندر کا کریڈٹ بی جے پی لے رہی ہے، جنتا دل پارٹی کے ایم پی کوشلندر کمار نے بھی مودی سرکار کی پالیسیوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ رام سب کا صرف بی جے پی کا نہیں۔

واضح رہے کہ 22 جنوری جنوری 2024 کو رام مندر کے افتتاح کے موقع پر مودی کو بطور مہمان خصوصی شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

دوسری جانب بھارتی میڈیا نے مقامی پولیس کے حوالے سے لکھا کہ نامعلوم شخص کی کال موصول ہوئی جس میں 22 جنوری کو رام مندر کے افتتاح کے موقع پر دھماکا کرنے کی دھمکی دی گئی ہے جبکہ تیہار سنگھ اور اوم پرکاش مشرا نامی دو افراد نے سوشل میڈیا کے ذریعے بھی یوگی آدتیہ اور رام مندر کو بم سے اڑانے کی دھمکی دی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Don`t copy text!