عمران خان کی بیٹوں سے ہر ہفتے بات کرانے کی درخواست مسترد

راولپنڈی کی انسداد دہشت گردی عدالت نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے بانی چیئرمین، سابق وزیر اعظم عمران خان کی بیٹوں سے ہفتہ میں ایک دفعہ بات کروانے کے لیے دائر درخواست مسترد کردی گئی۔

عمران خان کی بیٹوں سے ہر ہفتے بات کرانے کی درخواست مسترد

عمران خان کی بیٹوں سے ہفتہ میں ایک دفعہ ٹیلی فونک ملاقات کی درخواست پر سماعت انسداد دہشت گردی عدالت کے جج ملک اعجاز اصف نے کی۔

درخواست پر اڈیالہ جیل انتظامیہ کی جانب سے جواب داخل کروا دیا گیا جس میں مؤقف اپنایا گیا کہ جیل مینوئیل کے مطابق کسی ملزم کی واٹس ایپ پر رشتہ داروں سے ملاقات کا قانون موجود نہیں ہے۔

اس میں کہا گیا کہ عدالتی حکم کے مطابق سابق وزیراعظم کی مہینے میں 2 مرتبہ بیٹوں سے بات کروائی جاتی ہے۔

الیکشن کمیشن کی پولنگ سے متعلق ریکارڈز میں ’ترمیم‘ نے کئی سوالات کو جنم دے دیا

انسداد دہشت گردی عدالت نے ہفتے میں ایک مرتبہ واٹس ایپ پر عمران خان کی اپنے بیٹوں سے بات کروانے کی استدعا مسترد کر دی۔

یاد رہے کہ گزشتہ سماعت پر عدالت نے جیل انتظامیہ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے رپورٹ طلب کی تھی۔

واضح رہے کہ 30 مئی کو راولپنڈی کی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے اڈیالہ جیل حکام کو بانی پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) عمران خان سے بیٹوں کی بات کرانے کا حکم دے دیا تھا۔

66 / 100

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Don`t copy text!