ایک سال کے دوران سیکیورٹی فورسز کے آپریشنز میں 550 سے زائد دہشت گرد ہلاک

تشکور نیوز رپورٹنگ،

ملک سے دہشتگردی کے خاتمے کےلیے سیکیورٹی فورسز کی مؤثر اور جامع کامیابیاں

سیکیورٹی فورسز پاکستان سے دہشتگردی کے مکمل خاتمے کےلئے مسلسل سرگرم ہیں اور اس مقصد کے حصول میں سیکیورٹی فورسز کو مؤثر اور جامع کامیابیاں مل رہی ہیں۔

پاک فوج نے اس سال منظم اور جامع منصوبہ بندی کے ساتھ کارروائیاں عمل میں لاتے ہوئے دہشتگردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کے فیصلہ کن مرحلے کا آغاز کیا، پاک فوج کا مرکزی ہدف کالعدم تحریک طالبان پاکستان اور بلوچ لبریشن آرمی جیسے دیگر دہشت گرد گروہ ہیں جو افغانستان کی سرزمین سے مکمل مدد کیساتھ پاکستان پر حملہ آور ہوتے ہیں۔ 

پاکستان آرمی کی ملک بھر میں دہشت گردوں کیخلاف مؤثر اور تیز تر کارروائیوں کی بدولت دہشت گرد شدید بوکھلاہٹ اور مایوسی کا شکار ہیں، دہشت گردوں کی مایوسی کا اندازہ رواں سال کے اعدادوشمار سے لگایاجا سکتا ہے جن میں اب تک 24ہزار سے زائد آپریشنز کیے گئے اور اب تک 550 سے زائد دہشتگرد سیکیورٹی فورسز کے ہاتھوں جہنم واصل کیے جا چکے ہیں۔

اعداد وشمار کے مطابق سال 2023 میں ہلاک کیے جانے والے دہشتگردوں کی تعداد پچھلے 6 سالوں میں سب سے زیادہ ہے، صرف 2022 میں 400 کے قریب دہشتگرد سیکیورٹی فورسز کے ہاتھوں جہنم واصل ہوئے۔ پاکستان آرمی نے افغانستان کے آلہ کار دہشت گرد گروہوں کے گرد گھیرا تنگ کر دیا ہے اور دہشت گردی کے ہر حملے کا دندان شکن جواب دیا جائے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Don`t copy text!